موجودہ صوبائی حکومت گورننس کے مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کر رہی ہے،ترجمان بلوچستان حکومت

۔ترجمان حکومت بلوچستان لیاقت شاہوانی نے کہا ہے کہ بلوچستان میں شعبہ زراعت کے مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کیا جا رہا ہے

کوئٹہ 09اکتوبر :۔ترجمان حکومت بلوچستان لیاقت شاہوانی نے کہا ہے کہ بلوچستان میں شعبہ زراعت کے مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کیا جا رہا ہے۔زراعت پاکستان کی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہیں جس کا مجموعی قومی پیداوار میں تناسب تقریباً 30 فیصد ہے اور یہ ملک کی 50 فیصد افرادی قوت کو بلواسطہ یا بلاواسطہ روزگار یا روزگار کے مواقعے فراہم کرتا ہے، موجودہ صوبائی حکومت وزیر اعلی بلوچستان جام کمال کی قیادت میں شعبہ زراعت کے مسائل کو سنجیدگی سے دیکھ رہی ہے تاکہ ان کا موثر حل نکال کر زراعی پیداوار کو بڑھایا جا سکے،فی ا یکڑ پیداوار کو بڑھانے کیلئے جدید ٹیکنالوجی کو یقینی بنایا جائے گا،اس حوالے سے ہر ڈویڑنل ہیڈکواٹرز میں زراعت کے متعلقہ افسران کو ٹریننگ بھی دی جا رہی ہے تاکہ وہ کاشتکاروں کو کاشتکاری کے جدید طریقوں سے ہمکنار کروا سکیں ،ترجمان صوبائی حکومت لیاقت شاہوانی نے کہاکہ موجودہ صوبائی حکومت صوبے میں نئے ڈیمز بھی تعمیر کر رہی ہے جس سے پانی کی کمی کو پورا کرنے میں مدد ملے گی اور زیر زمین پانی کا تناسب بھی برقرار رہے گا،انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں زراعت کے شعبہ کو درپیش مسائل میں پانی کا مسئلہ سب سے سنگین ہیں، اگر صوبہ کو پانی کا مقررہ حصہ پورا مل جائے تو پانی کا مسلہ جلد حل ہو سکے گا،اس حوالے سے صوبائی حکومت اقدامات کر رہی ہے۔ترجمان نے مزید کہا کہ زراعت کی پیداوار بڑھنے سے اور پانی کی کمی پر قابو پانے سے صوبے میں ترقی و خوشحالی آئے گی اور صوبے میں ترقی کا نیا دور شروع ہو جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں