نئے بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگے گا، اقتصادی جائزہ پیش

0

مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے کہا ہے کہ نئے بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگے گا۔ اقتصادی جائزہ پیش کرتے ہوئے حفیظ شیخ نے ٹیکس ہدف کے حصول میں ناکامی کا ذمے دار کورونا کو قرار دے دیا۔اقتصادی سروے رپورٹ پر مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ نے میڈیا بریفنگ کے دوران بتایا کہ پُراعتماد تھے ٹیکس وصولی چار ہزار سات سو ارب روپے تک کرلیں گے مگر کورونا نے نہیں کرنے دیا، جبکہ رواں مالی سال میں بڑا ٹیکس ہدف مقرر کیا گیا تھا،اندازہ تھا کہ 4800 ارب روپے کا ٹیکس اکٹھا ہوسکے گا۔ مشیر خزانہ نے کہا کہ کورونا کی وجہ سے تمام اندازے الٹ ہوگئے، ملکی قرضوں کا بوجھ جی ڈی پی کا 88 فیصد ہے، آئندہ بجٹ میں 3 ہزار ارب روپےقرض اتارنے کیلئے رکھے گئے ہیں۔ اس موقع پر ایف بی آر کی چیئرپرسن نوشین جاوید امجد نے کہا کہ رواں مالی سال اِنکم ٹیکس 32 فیصد، ایف ای ڈی کی گروتھ 24 فیصد تھی، کورونا سے قبل مقامی سطح پر ٹیکسز کی گروتھ 27 فیصد بڑھ رہی تھی، کورونا وائرس کی وجہ سے گروتھ میں کمی ہوکر 14 فیصد رہ گئی مشیر خزانہ نے کہا کہ گذشتہ سال کی 3.3 فیصد گروتھ کا نمبر ادارہ شماریات نے دیا تھا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.