طالبان جنگ پسند ٹولہ ہے، امریکہ کے خصوصی ایلچی کا اعتراف

0

واشنگٹن: افغانستان کے امور میں امریکہ کے خصوصی نمائندے نے طالبان کے ساتھ کئی مرحلوں میں مذاکرات کرنے کے بعد اب اعتراف کیا ہے کہ طالبان ایک جنگ پسند گروہ ہے، طالبان اس ملک میں جنگ بندی معاہدے کا مخالف ہیں اور امن بھی جنگ کے ذریعے قائم کرنا چاہتے ہیں۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے نے آئی آر آئی بی کی رپورٹ کے حوالے سے کہا ہے کہ افغانستان کے امور میں امریکہ کے خصوصی نمائندے زلمئے خلیل زاد نے افغانستان کے مختلف علاقوں پر طالبان کے حملوں کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ طالبان اس ملک میں جنگ بندی معاہدے کا مخالف ہیں اور امن بھی جنگ کے ذریعے قائم کرنا چاہتے ہیں۔در ایں اثنا افغانستان کی قومی سلامتی کے ادارے نے بدھ کے روز کہا تھا کہ طالبان نے ڈھائی ماہ قبل امریکہ کے ساتھ نام نہاد امن معاہدے پر دستخط کرنے کے باوجود اب تک افغانستان کے مختلف علاقوں پر 3 ہزار 712 مرتبہ حملے کئے۔افغان حکام کا کہنا ہے کہ طالبان گروہ دیگر دہشتگرد گروہوں کے حملوں کیلئے حالات سازگار بنا کر ملک میں جاری جارحیت سے اپنے آپنا دامن نہیں جھاڑ سکتا، اس لئے کہ افغانستان میں ہونے والے اکثر حملوں میں طالبان کا ہاتھ ہے۔واضح رہے کہ افغانستان کے مختلف علاقوں پر طالبان کے حالیہ حملوں خاص طور سے کابل کے ہسپتال پر ہونے والے حملے میں درجنوں افراد جاں بحق ہوئے ہیں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.