صومالیہ میں الشباب کا خودکش کاربم حملہ،چارافراد ہلاک

0

موغادیشو (این این آئی)صومالیہ کے دارالحکومت موغادیشو کے نزدیک ایک زیرتعمیر شاہراہ پر خودکش کار بم دھماکے میں چار افراد ہلاک اور چھ ترک انجینئرز سمیت بیس سے زیادہ زخمی ہوگئے ۔ادھرصومالیہ میں القاعدہ سے وابستہ انتہا پسند گروپ الشباب نے اس خودکش بم حملے کی ذمے داری قبول کرلی ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق صومالی پولیس نے بتایاکہ خودکش بمبار نے دارالحکومت کے نزدیک ایک زیرتعمیر شاہراہ پر کام میں مصروف ورکروں کو حملے میں نشانہ بنایا ۔پولیس کے کرنل عابدی عبدالالٰہی کا کہنا تھا کہ حملہ آور کا ہدف ترکی کے تعمیراتی ورکر تھے۔دھماکا اتنا شدید تھا کہ اس سے ترک کنٹریکٹروں کے زیر استعمال کنٹینر تباہ ہوگیا ہے۔ترکی کے وزیر صحت فخرالدین کوکا نے بم دھماکے میں چھے ترک شہریوں کے زخمی ہونے کی تصدیق کی اور کہا کہ ان میں دو کی حالت تشویش ناک ہے۔ ترک تعمیراتی ورکر صومالی دارالحکومت مقدیشو سے 30 کلومیٹر شمال میں واقع شہر افگوئے کی جانب جانے والی مرکزی شاہراہ کی تعمیر کے منصوبے پر کام کررہے ہیں۔زخمیوں میں زیادہ تر پولیس اہلکار ہیں۔ وہ ترک ورکروں کی سکیورٹی پر مامور تھے۔صومالیہ میں القاعدہ سے وابستہ انتہا پسند گروپ الشباب نے اس خودکش بم حملے کی ذمے داری قبول کرلی ہے۔الشباب کے جنگجو آئے دن مقدیشو اور اس کے نواحی علاقوں میں اس طرح کے تباہ کن بم حملے کرتے رہتے ہیں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.