فرانسیسی وزیر صحت سے میڈیکل اسٹاف کے ماسک کا مطالبہ

0

پیرس (این این آئی)فرانسیسی وزیر صحت کو پیرامیڈیکل اسٹاف اور ریٹائرڈ افراد کی گھروں میں دیکھ بھال کرنے والوں نے خط کے ذریعے پیرس میں کورونا وائرس سے ایک لاکھ رہائشیوں کی ہلاکت کا خدشہ ظاہر کیا اور وزیر صحت سے فوری طور پر ماسک کا مطالبہ کیا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق پیشہ ور افراد نے وزیر کو ارسال کردہ ایک خط میں متنبہ کیا ، کہ بوڑھوں کی اس کمزور آبادی میں زیادہ تر آلودگی اسیمپومیٹک دیکھ بھال کرنے والوں کی وائرل ٹرانسمیشن اور ماسک نہیں پہننے کا نتیجہ ہے۔انہوں نے خط میں کہا کہ یہ خطرے کی گھنٹی ہے، وزیر صحت اولیور ورن کو لکھے گئے ایک خط میں ، نرسنگ ہومز ، ریٹائرمنٹ ہومز اور گھریلو خدمات دینے والوں نے کورونا وائرس کا سامنا کرنے والے بوڑھے لوگوں کی صورتحال کی طرف توجہ مبذول کر ائی ہے۔ان اداروں کا کہنا تھاکہ انہیں ایک لاکھ رہائشیوں کی موت کا خدشہ ہے۔ اس کی وجہ عملے کے ممبروں کے ساتھ ماسک کی ایک اہم کمی ہے جو ان سے نمٹتے ہیں۔خط میں مزید کہا گیا کہ اس وباء پر قابو کرنے کی تازہ ترین معلومات اور ہماری دی گئی معلومات پر عمل کریں۔مزید کہا گیا کہ اداروں اور خدمات کی بڑھتی ہوئی تعداد میں مشاہدہ کرنے والی تشویشناک صورتحال سے یہ پتہ چلتا ہے کہ کیسوں کی تعداد میں اضافہ تیزی سے ہورہا ہے اور یہ کہ وسیع اکثریت میں مسلسل وائرل ہونے کی وجہ سے ہے۔ایک متشدد نگہداشت رکھنے والاگیریاٹیکٹرس سیکٹر میں پروفیشنل لکھتے ہیں کہ5 لاکھ ماسک درکار ہیں۔ان کی رپورٹ کے مطابق اوسطا 8 8 دائمی بیماریوں کے ساتھ ، یہ ایک نشانہ بنتے ہیں جس میں کورون وائرس سارس-کو -2 میں انفیکشن کے خطرے کا خطرہ بہت زیادہ ہوتا ہے۔اس طرح خط کے مصنفین نے وزیر سے درخواست کی کہ وہ ان کے تمام نگہداشت کرنے والوں کے لئے بہت جلد ماسک فراہم کریں ، جو فرانس میں روزانہ تقریبا 5لاکھ ماسک کی نمائندگی کرتا ہے۔سرجری ماسکوں کے انتظام کی حکمت عملی کے حصے کے طور پر آپ کی ہدایتوں کے ذریعہ کوویڈ 19 مریضوں کے لئے وقف کردہ ایک شعبے کی تشکیل ، جو ہمیں نرسنگ ہومز کی اصل صورتحال سے قطعی طور پر راضی نہیں لگتا ہے ،۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.