نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ کی جانب سے کانگو مرض کی تشخیص کیلئے پی سی آر مشین فراہم کردی گئی

نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ کی جانب سے کانگو مرض کی تشخیص کیلئے پی سی آر مشین فراہم کردی گئی

کوئٹہ (زیبائے پاکستان آئی این پی ) نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ کی جانب سے کانگو مرض کی تشخیص کیلئے پی سی آر مشین فراہم کردی گئی ہے جس کے بعد اب کوئٹہ میں ہی کانگو مرض کی تشخیص کے ٹیسٹ ہونگے ۔یہ بات فاطمہ جناح جنرل اینڈ چیسٹ ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹرنوراللہ موسیٰ خیل نے گزشتہ روز آئی این پی سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ ان کاکہناتھاکہ ہم نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ کے شکر گزار ہیں جنہوں نے ہمیں ہسپتال میں کانگو مرض کی تشخیص کیلئے پی سی آر مشین فراہم کردی ہے پہلے کانگو وائرس سے متاثر ہونے کے شبے میں ہسپتال لائے جانے والے مریضوں کے ٹیسٹ کیلئے ان کے خون ودیگر کے نمونے ہمیں نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ اسلام آباد یا آغا خان ہسپتال کراچی بھجوانے پڑتے جس کی رزلٹ کیلئے ہمیں ایک ہفتے تک انتظار کرنا پڑتا مگر اب پی سی آر مشین ملنے کے بعد نہ صرف کانگو مرض کی تشخیص سے متعلق ٹیسٹ کوئٹہ میں ہی ہونگے بلکہ ہمیں ایک ہفتے تک انتظار نہیں کرناپڑے گا بلکہ ہمیں 24گھنٹوں کے دوران مطلوبہ ٹیسٹ کارزلٹ دستیاب ہوگا وہ بھی بالکل مفت ۔انہوں نے کہاکہ صوبائی وزیر صحت نصیب اللہ مری اور صوبائی سیکرٹری صحت حافظ عبدالماجد کی خصوصی دلچسپی کے باعث صوبوں کے مختلف ہسپتالوں میں جدید مشینری اور ادویات کی فراہمی ممکن بنائی جارہی ہے فاطمہ جناح جنرل اینڈ چیسٹ ہسپتال کو بھی کروڑوں روپے کی مشینری فراہم کی گئی ہے جس کے بدولت کانگو اور دیگر امراض کی بروقت تشخیص اور علاج کی سہولیات غریب عوام کو میسر آرہی ہے ،انہوں نے کہاکہ اس وقت ہمارے پاس کانگو وائرس سے متاثر ہ ایک مریض کے ٹیسٹ رزلٹ مثبت ملا ہے جس کاعلاج کیاجارہاہے اس کے علاوہ بھی بعض دیگر مریضوں کے ٹیسٹ ہوناباقی ہے اس موقع پر فاطمہ جناح جنرل اینڈ چیسٹ ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کے ہمراہ پروفیسر ڈاکٹر شیرین خان بھی موجود تھے اور انہوں نے پی سی آر مشین ودیگر کی فراہمی پر اطمینان کااظہار کیااور امید ظاہر کی کہ اس سے صوبے کے غریب مریضوں کو لاحق امراض کی تشخیص اور علاج ومعالجے میں آسانی ہوگی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں