جیلیں بھر دیں گے لیکن حکومت کو نہیں مانیں گے، مولانا فضل الرحمان

جیلیں بھر دیں گے لیکن حکومت کو نہیں مانیں گے، مولانا فضل الرحمان

پشاور (زیبائے پاکستان آن لائن ) جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ ہم جیلیں بھر دیں گے لیکن حکومت کو نہیں مانیں گے۔ ہر وقت جھوٹے الزامات لگانے والے عمران خان ثابت کریں کہ بیروں ملک میری جائیدادیں کہاں کہاں ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پشاور میں یوم سیاہ کے موقع پر متحدہ اپوزیشن کے احتجاجی جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیاانہوں نے کہا کہ جیلیں بھر وادے، اپوزیشن جماعتیں اس حکومت کو اقتدار سے نکال باہر کریںگئے،25 جولائی کا الیکشن جعلی تھا قوم نے مسترد کردیاقوم نے اب سلیکٹڈ حکومت کو مستردکیا، جیلیں بھر دینگے مگر تمہارے حکومت کو نہیں ماننگے، مولانا فضل الرحمن نے اپوزیشن جماعتوں کے رہنماؤں کو ملین مارچ جلسے میں شرکت کی دعوت دی انہوں نے کہاکہ ایک سال قبل آج کے روز الیکشن میں دھاندلی کے ذریعے سلیکٹڈ وزیراعظم کوقوم پر مسلط کیا گیاہے ایک سال میں سلیکٹڈ وزیراعظم نے معیشت کا دیوالیہ نکال اور غریب عوام پر مہنگائی کا ایسا عذاب مسلط کیا کہ ان کو دو وقت کی روٹی بھی میسر نہیں ،25جولائی کا الیکشن جعلی تھا قوم نے اب سلیکٹڈ حکومت کو مسترد کردیاہے،جیلیں بھر دینگے لیکن موجودہ سلیکٹڈ حکومت کو نہیں مانتے عوامی نیشنل پارٹی کے سربراہ اسفندیار ولی نے کہا کہ سب کو چور چور کہنے والا کپتان علیمہ باجی کے جائیدادوں کا حساب تو دے، نواز شریف کی بیٹی اور آصف زرداری کی بہن عدالتوں میں حاضری دے سکتی ہیں، تو علیمہ خان سے حساب کیوں نہیں پوچھا جارہا ہے؟ انہوں نے وزیر اعظم کو چیلنج دیتے ہوئے کہا کہ ہر وقت جھوٹے الزامات لگانے والے عمران خان ثابت کریں کہ بیروں ملک میری جائیدادیں کہاں کہاں ہیں؟ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتیں نا اہل حکومت کے خلاف تحریک کا آغاز کر چکے ہیں، انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال 25جولائی کو عوامی رائے پر ڈاکہ ڈال کر ایک کٹھ پتلی کو 22کروڑ عوام پر مسلط کر دیا گیا،انہوں نے کہا کہ تبدیلی کے نام پر اقتدار میں آنے والے تبدیلی لے کر آئے اور تبدیلی کا پاکستان پرانے پاکستان کے مقابلے میں تباہی کے دہانے پر پہنچ چکا ہے، تمام اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے کو ہی تبدیلی کہا جاتا ہے، حالیہ بجٹ سے ہونے والی مہنگائی، بے روزگاری اور غربت نے 70سالہ ریکارڈ توڑ دیا ہے، عوام دشمن حکمرانوں نے جینے کا حق چھین کر لوگوں کو خود کشیوں پر مجبور کر رکھا ہے،پیپلز پارٹی کے رہنما نیر بخاری نے اپنے خطاب میں کہا کہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار سلیکٹڈ حکومت کو اقتدار میں نہیں لایا گیا،نااہل حکومت غریبوں کی زندگی عذاب بناکر یوم تشکر منارہی ہے، انہوں نے کہا 25جولائی 2018کو عوامی مینڈیٹ پر ڈاکہ ڈالا گیا بہت جلد اپوزیشن چیرمین سینٹ کو ہٹا کر حکومت کے خاتمے کی تحریک کا آغاز کریگی۔

جیلیں بھر دیں گے لیکن حکومت کو نہیں مانیں گے، مولانا فضل الرحمان” ایک تبصرہ

اپنا تبصرہ بھیجیں