سعودی عرب جدید ترین گاڑیوں کا مرکز ہوگا،خالد الفالح

0

سعودی عرب میں غیرملکی سرمایہ کاری 20 ارب تک پہنچ چکی ہے،ہمارا ٹارگٹ 157 ارب ڈالر تک کا ہے
ریاض :سعودی وزیر سرمایہ کاری خالد الفالح نے کہا ہے کہ سعودی عرب مستقبل قریب میں جدید ترین گاڑیوں کا مرکز ہوگا، جن میں بیشتر گاڑیاں الیکٹرک ہوں گی ۔عرب نشریاتی ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے خالد الفالح نے کہا کہ سعودی عرب میں الیکٹرک گاڑیوں کی لوسیڈ فیکٹری کا افتتاح کیا گیا ہے یہ ملک کی 3 اہم فیکٹریوں میں سے ایک ہوگی۔ انہوں نے بتایا کہ بہت جلد جدید گاڑیوں کی اسمبلنگ شروع ہوگی جس کے نتیجے میں الیکٹرک اور ہائیڈروجن سے چلنے والی گاڑیاں آئیں گی۔انہوں نیبتایا کہ سعودی کمپنیوں نے ہائیڈروجن کے شعبے میں بین الاقوامی کمپنیوں کے ساتھ سرمایہ کاری کے بڑے معاہدوں پر دستخط کیے ہیں ،و زارت تجدد پذیر توانائی میں سرمایہ کاری کی حوصلہ افزائی کررہی ہے۔انہوں نے بتایا کہ سعودی عرب میں غیرملکی سرمایہ کاری 20 ارب تک پہنچ چکی ہے،ہمارا ٹارگٹ 157 ارب ڈالر تک کا ہے ،تمام شعبوں میں سرمایہ کاروں کے لیے جامع قومی حکمت عملی پلان جاری کردیا گیا ہے

Leave A Reply

Your email address will not be published.