لندن، چاقو زنی کی 2 وارداتیں، 2 بچے اور ایک نوجوان ہلاک

0

لندن: برطانیہ میں چاقو زنی کی دو وارداتوں میں 2 بچوں اور ایک نوجوان کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق لندن اور برمنگھم میں چاقو زنی کی دو مختلف وارداتوں میں دو بچوں سمیت تین افراد کو جانوں سے محروم کر دیا گیا، جب کہ چالیس سال کا ایک شخص زخمی ہو گیا۔چاقو زنی کی پہلی واردات لندن میں ہوئی، مشرقی لندن کے علاقے ایلفرڈ میں چھریوں کے وار کر کے 1 سال کی بچی اور 3 سال کے بچے کو قتل جب کہ 40 سالہ شخص کو زخمی کر دیا گیا، پولیس نے واقعے کی تحقیقات شروع کر دیں۔چاقو زنی کی دوسری واردات برمنگھم میں ہوئی جہاں 20 سالا نوجوان کو دن دہاڑے چھری مار کر شدید زخمی کر دیا گیا، نوجوان کو ایئر ایمبولینس کے ذریعے اسپتال پہنچانے کی کوشش کی گئی تاہم وہ راستے ہی میں دم توڑ گیا، برمنگھم پولیس نے عوام سے واردات کے سلسلے میں تحقیقات میں مدد دینے کی اپیل کر دی ہے۔پولیس کے مطابق لندن میں ہونے والے واقعے میں دونوں بچے اور چالیس سالہ شخص ایک ہی خاندان سے تعلق رکھتے ہیں، انھیں گھر کے اندر حملہ کر کے چاقو سے زخمی کیا گیا، جب پولیس جائے واردات پر پہنچی تو 12 ماہ کی بچی دم توڑ چکی تھی جب کہ تین سالہ بچے اور چالیس سالہ شخص کو زخمی حالت میں اسپتال پہنچایا گیا، تاہم بچہ بھی زخموں کی تاب نہ لا کر ٹراما سینٹر میں جاں بحق ہو گیا۔اسکاٹ لینڈ یارڈ کے تفتیش کاروں نے اس دوہرے قتل کی واردات کی تحقیقات شروع کر دی ہیں، پولیس نے عوام سے اپیل کی کہ اس مشکل وقت میں مذکورہ فیملی کی پرائیویسی کا احترام کیا جائے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.